شکارپور: رواں سال سندھ میں پولیو کا کوئی بھی کیس ظاہر نہیں ہوا، سید حسن رضا


 جمع ۱۷ مارچ ۲۰۱۷    ۴ ماہ پہلے     ۴۴     شکارپور   پرنٹ نکالیں
ڈپٹی کمشنر شکارپور سید حسن رضا اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے

رپورٹ    رحیم بخش جمالی   :شکارپور : ڈی سی آفیس شکارپور میں آٹھ دن پر مشتمل آئی پی وی پولیو مہم کا جائزہ لینے کے لیئے دربار ہال میں اجلاس ہوا ، اجلاس کی صدارت ڈپٹی کمشنر شکارپور سید حسن رضا نے کی ، اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی سوشل موبلائیزر کوآرڈینیٹر جان محمد اور ضیاء رحمان نے کہاکہ دنیا میں صرف تین ممالک میں پولیو موجود ہے اور ان تین ممالک میں ایک پاکستان بھی ہے انہوں نے کہاکہ 2014 میں ملک میں 302پولیو کے کیس ظاہر ہوئے تھے جبکہ 2017 میں صرف د وکیس ظاہر ہوئے ہیں جن میں سے ایک پنجاب اور ایک خیرپختون خواہ میں ظاہرہوئے ہیں جبکہ رواں سال سندھ میں کوئی بھی کیس ظاہر نہیں ہوا ہے انہوں نے کہاکہ موجود مہم بہت اہم مہم ہے جس کی ویکسینیشن بھی بہت مہنگی ہے انہوں نے کہاکہ ہمیں اس مہم سے فائدہ لینا چاہیے ، اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر شکارپور سید حسن رضا نے کہاکہ سندھ اندر پولیو کا کوئی بھی کیس ظاہر نہیں ہوا ہے اور شکارپور بھی پولیو سے پاک ہے انہوں نے کہاکہ یہ آٹھ دن کی آئی پی وی مہم سے پولیو پھیلنے سے رک جائے گا ، انہو ں نے کہاکہ پولیو کو اس مہم کے ذریعے آخری دھکا دیں گے ، اس موقعے پر انہو ں نے سارے یوسی سیکرریٹریز ، تپیداروں اور مڈیکل افسران کو ہدایت کی کہ وہ گاؤں اور ہر جھوٹے بڑے شہر میں لوگوں کو بتائیں کہ چار ماہ سے دو سالوں کے بچوں کو ویکسین کی انجکیشن لگوائیں تاکہ ضلع کے بچے معذوری سے بچ سکیں ، اجلاس میں ڈبلیو ایچ اونمائندہ ڈاکٹر سہیل احمد ، چاروں تحصیلوں کے اسسٹنٹ کمشنر اور سپروائیزروں نے شرکت کی ۔