کراچی: سندھ اسمبلی میں وزیراعظم کیخلاف قراردادیں منظور


 جمع ۲۱ اپريل ۲۰۱۷    ۲ ماہ پہلے     ٦۵     کراچی   پرنٹ نکالیں
(فائل فوٹو)

رپورٹ    ویب ڈیسک   :کراچی: سندھ اسمبلی میں پیپلز پارٹی اور تحریک انصاف کی جانب سے وزیر اعظم کیخلاف قراردادیں منظور کرلی گئیں ۔ وزیر اعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کیا گیا ہے ۔ ایوان میں قائد حزب اختلاف خواجہ اظہار الحسن کو بات کرنے کا موقع نہ ملنے پر اسمبلی میں شور شرابا شروع ہوا ۔ نثار کھوڑو کی جانب سے پیش کی گئی قرار داد میں وزیر اعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کیا گیا ۔ قرار داد میں کہا گیا ہے کہ دو ججز نے واضح کہا کہ وزیراعظم صادق اور امین نہیں، وزیر اعظم کیسے افسران کے سامنے پیش ہونگے ۔ نثار کھوڑو نے کہا ڈھٹائی کی انتہا ہوگئی ہے ۔ ڈپٹی سپیکر شہلا رضا کا کہنا تھا کہ ‏افسوس وزیر اعظم کو کبھی کٹہرے میں نہیں لایا گیا ، ‏ثابت ہوگیا چور بہت طاقت ور ہے ۔ انہوں نے کہا پاناما سکینڈل پر دنیا میں تین وزرائے اعظم کو ہٹنا پڑا ۔ اس سے قبل ایوان میں خواجہ اظہار اور شہلا رضا کے درمیان بات کرنے کا موقع نہ ملنے پر تلخ کلامی ہوئی ۔ خواجہ اظہار نے کہا یہ آپ کا گھر اور ڈرائنگ روم نہیں ہے ، اس طرح کام نہیں چلے گا جس پر شہلار رضا بولیں آپ کو بات کرنی ہے تو کریں ورنہ باہر جائیں ۔ نثار کھوڑو جذباتی ہوگئے خواجہ اظہار کو تنبیہ کی کہنے لگے خواجہ آپ اس طرح سے ڈپٹی سپیکر سے بات نہیں کر سکتے ۔