جامعہ سندھ میں دھرتی کے عالمی دن کے حوالے سے شجرکاری مہم، جامعہ کو سرسبز بنایا جائےگا، رجسٹرار


 جمع ۲۱ اپريل ۲۰۱۷    ۵ دن پہلے     ۸۱     جامشورو   پرنٹ نکالیں

رپورٹ    علی مراد چانڈیو   :جامشورو: دھرتی ماں کا عالمی دن منانے کے لیے جامعہ سندھ کے جغرافیہ شعبے کی جانب سے ترتیب دی گئی دو روزہ تقریبات کے سلسلے میں کل پہلے روز شجرکاری مہم کا اہتمام کیا گیا۔شجرکاری کا افتتاح رجسٹرار پروفیسر ڈاکٹر محمد سلیم چانڈیو اور شعبے کے چیئرمین پروفیسر ڈاکٹر محب علی لغاری نے پودے لگا کر کیا۔ دھرتی ماں سے امن، محبت اور یکجہتی کے اظہار کے لیے اساتذہ اور طلباءکی بڑی تعداد نے شعبے کے لان میں ”دھرتی کے لیے شجر“ کے نعرے کو دہراتے ہوئے پودے لگائے۔ اس موقع پر فزیکل ایجوکیشن شعبے کے پروفیسر ڈاکٹر محمودالحسن مغل، پروفیسر محمد رفیق دھنانی اور پروفیسر سوجو مل کے علاوہ اساتذہ، طلباءاور ملازمین نے پودے لگا کر دھرتی ماں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے اسے سرسبز و خوشحال بنانے کے عزم کا اظہار کیا ۔اس موقع پر بات کرتے ہوئے رجسٹرار پروفیسر ڈاکٹر محمد سلیم چانڈیو نے کہا کہ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر فتح محمد برفت کی سربراہی میں جامعہ سندھ کو سرسبز بنایا جا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دھرتی کے عالمی یوم پر جاگرافی شعبے کی جانب سے اپنی دھرتی ماں سے پیار کے اظہار کے طور پر پودے لگائے گئے، جو کہ ایک اچھی بات ہے۔ جاگرافی ڈپارٹمنٹ کے چیئرمین پروفیسر محب علی لغاری نے کہا کہا کہ دھرتی ماں کے برابر ہوتی ہے، اس کا احترام ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ میں زیادہ سے زیادہ پودے لگار اپنی دھرتی سے پیار کا اظہار کیا جا رہا ہے۔