اوستہ محمد: کاشتکار زرعی ماہرین کے مشوروں سے گندم کی کاشت کرکے زیادہ فصل حاصل کر سکتے ہیں،لعل بخش قریشی


 جمع ۲۱ اپريل ۲۰۱۷    ۲ ماہ پہلے     ۱٦٦     اوستا محمد   پرنٹ نکالیں
زرعی سیمینار سے مقررین خطاب کرتے ہوئے

رپورٹ    منظور سومرو   :اوستہ محمد :ایگریکلچرز(رسریچ) سمنٹ پراجیکٹ کی جانب سے ا یک روزہ سیمنار سے رسرچ آفیسرلعل بخش قریشی ،جمیل خان رند، عبدالرزاق پلال ، بگن خان جمالی نے خطاب کرتے ہوئے کہا انہوں نے کہا کہ وہ ملک ترقی یا فتہ ہے جو زراعت میں خود کفیل ہے ماشاء اللہ پاکستان زراعت میں خود کفیل ہے لیکن اسکے باوجود سیکریٹری ایگری کلچرڈاکٹر محمد جاوید ترین کی خصوصی ہدایت پر کاشتکاروں میں زراعت کے حوالے سے شعور اور آگاہی پیدا کرنے کے لئے سمینار منعقد کئے جارہے ہیں تاکہ زمینداروں اور کاشتکاروں کو گندم کی کاشت کے لئے بہترین صلاح مشورے دئے جائیں ،انہوں نے کہا کہ بہتر فصل اگانے کے لئے گندم کی بوائی زیرو ٹیلج ڈرل کے ذریعے ہو نا چاہیے کیونکہ اس سے نا تو بیج ضائع ہوتا ہے اور نا پانی اور اسکی پیداوار بھی زیادہ ہوتی ہے ، اس کے علا وہ جس زمین میں کاشت ہوتی ہے وہاں کی مٹی ماہرین زراعت کو دیکھا نی چاہئے تاکہ تھور زدہ کی مٹی کو لبارٹی سے چیک کرائی جائے تاکہ زمین میں پائی جانے والی بیماری کا پتہ چل سکے اور اس کا علاج کیا جائے پائی جائے تاکہ کاشتکا ر بہتر فصل اگا سکے ، انہوں نے کہا کہ زمینداروں کو زیادہ سے زیا دہ فائدہ ہو سکے ، انہوں مشورہ دیا جہاں گندم کا شت کیا جائے پہلے اس زمین کی مٹی کا لیبارٹی ضروری ہے ۔