جمعرات ۱۳ آگست ۲۰۲۰ -

جس طرح جج کوبرطرف کیا گیا اس کے فیصلوں کو بھی کالعدم قرار دیا جائے: مریم نواز

ویب ڈیسک | ایک ماہ پہلے

60

No-Image

اسلام آباد:(جمع:2020-07-03)پاکستان مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر و سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے مطالبہ کیا ہے کہ جس طرح جج کو برطرف کیا گیا، اسی طرح اس کے فیصلوں کو بھی کالعدم قرار دیا جائے۔

لاہور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس محمد قاسم خان نے ویڈیو اسکینڈل میں ملوث احتساب عدالت کے سابق جج ارشد ملک کو ملازمت سے برطرف کردیا ہے۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کی سربراہی میں 7 رکنی انتظامی کمیٹی نے ارشد ملک کی برطرفی کا فیصلہ کیا۔

اس حوالے سے ردعمل میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی بیٹی مریم نواز نے والد کی سزا بھی ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

اپنی ٹوئٹ میں مریم نواز کا کہنا تھا کہ آج کا فیصلہ بے شک سچ کی فتح اور جھوٹ کی شکست ہے اور اس فیصلے نے نواز شریف پر ہی نہیں بلکہ عدل و انصاف کے دامن پر لگا ایک بڑا داغ دھودیا ہے، اللہ کا بے انتہا شکر ہے جس کے ہاں نہ دیر ہے اور نہ اندھیر ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اب عدلیہ کے وقار اور انصاف کا تقاضہ ہے کہ داغدار جج کے داغدار فیصلوں کو بھی پھاڑ پھینکا جائے۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ 3 بار ملک کے وزیر اعظم رہنے والے مقبول ترین سیاست دان کی بے گناہی پر وقت کا فیصلہ آگیا ہے، 7 محترم جج صاحبان نے جج کی برطرفی کے ذریعے واضح کر دیا ہے کہ نوازشریف کو کس طرح سزائیں دی گئیں۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ انصاف کبھی ادھورا نہیں ہوتا، جس طرح جج کو برطرف کیا گیا ہے، اسی طرح اس کے بدعنوان فیصلوں کوبھی کالعدم قرار دیا جائے۔

ان کا کہنا ہے کہ آئین و قانون کے احترام کا درس دینا بہت آسان ہے، یہ جانتے ہوئے کہ آپ بے قصور ہیں اور ظلم و ناانصافی ہو رہی ہے، اپنی شریک حیات کو بستر مرگ پر چھوڑ کر قانون کے سامنے سر جھکا دینے کے لیے نواز شریف کا جگر اور حوصلہ چاہیے، اللّہ بے گناہ اور بہادر لوگوں کو تنہا نہیں چھوڑتا۔

Web Portal Developed and Designed by MIT SOFTWARE SOLUTION Hyderabad : http://mitsoftsolution.net, Contact us : (022) 3411371