news-details

پی ٹی آئی کا لانگ مارچ: کنٹینر پر فائرنگ، ایک جاں بحق، عمران خان، فیصل جاوید سمیت متعدد زخمی

وزیرآباد: (جمعرات: 03 نومبر2022ء) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے لانگ مارچ کے دوران سابق وزیراعظم کے کنٹینر پر فائرنگ ہوئی جس کی زد میں آ کر ایک شخص جاں بحق ہو گیا، اس واقعہ میں عمران خان اور فیصل جاوید سمیت متعدد افراد زخمی ہوئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق پی ٹی آئی کا لانگ مارچ اس وقت وزیرآباد کی جانب رواں دواں ہے اور اس کی اگلی منزل شہر میں جلسہ کرنے کی ہے، اس دوران عمران خان کے کنٹینر کے قریب نامعلوم افراد کی جانب سے فائرنگ کی گئی۔
فائرنگ کے باعث ایک شخص جاں بحق ہو گیا ہے جبکہ 5 افراد زخمی ہوگئے جنہیں فوری ہسپتال میں علاج کے لئے منتقل کر دیا گیا ہے، زخمی ہونے والوں میں عمران خان، سینیٹر فیصل جاوید، پی ٹی آئی رہنما احمد چٹھہ بھی شامل ہیں۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ دو میں سے ایک حملہ آور کو گرفتار کرلیا گیا ہے جبکہ دوسرا فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا، عمران خان کو پنڈلی پر گولی لگی ہے۔ پولیس کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ فائرنگ کرنے والے مسلح شخص کا نام فیصل بٹ ہے، حملہ آور نے فائرنگ کے لئے اے کے 47 رائفل کا استعمال کیا۔
دوسری طرف وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ نے لانگ مارچ کے دوران ہونے والی فائرنگ کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے اور گہری تشویش کا اظہار کیا ہے اور وزیراعظم شہباز شریف کی ہدایت پر چیف سیکرٹری اور آئی جی پولیس، وفاقی سکیورٹی ایجنسیز سے بھی فائرنگ واقعے کی رپورٹ طلب کر لی ہے۔
وزیراعظم شہباز شریف نے وزیر آباد کے اللہ چوک میں لانگ مارچ پر فائرنگ کے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے اور واقعے کی فوری طور پر رپورٹ طلب کر لی ہے۔ وزیراعظم نے وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ کو آئی جی پنجاب پولیس فیصل شاہکار اور چیف سیکرٹری پنجاب سے فوری طور پر رپورٹ کرنے کی ہدایت کی ہے۔
پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹر فیصل جاوید نے پی ٹی آئی کے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ پر اپنے ویڈیو بیان میں کہا کہ سب کے لیے ڈھیروں دعائیں ہیں، اللہ سب کو اپنے حفظ و امان میں رکھے، اللہ کرے سب خیریت سے ہوں، کچھ ہمارے دوست شدید زخمی ہیں، ہمارا ایک ساتھی کے بارے میں بتایا جا رہا ہے کہ وہ شہید ہو گیا ہے۔ سب سے درخواست ہے زخمیوں کے لیے فوری طور پر دعائیں کریں۔
آئی جی پنجاب فیصل شاہکار نے وزیر آباد میں عمران خان کے کنٹینر کے قریب فائرنگ کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے آر پی او گجرات سے واقعہ کی رپورٹ طلب کرلی اور سی پی او گجرات کو فوری موقع پر پہنچنے کی ہدایت کی۔ انہوں نے کہا کہ واقعہ کی ہر پہلو سے انکوائری کی جائے، فائرنگ کرنے والے ملزمان کو جلد از جلد قانون کے کٹہرے میں لایا جائے۔
پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹر اعجاز چودھری نے دعویٰ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیر آباد میں پی ٹی آئی کے لانگ مارچ پر فائرنگ کے باعث ایک کارکن شہید ہو گیا۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ میں نے کل رات احمد چٹھہ کو فون پر بتایا تھا کہ وزیرآباد میں عمران خان پر قاتلانہ حملہ ہو گا، سو قاتلانہ حملہ ہو گیا۔ انہوں نے دعویٰ کرتے ہوئے لکھا کہ ایک کارکن شہید ہوگیا اور ہمارے 4 لیڈر زخمی ہوئے۔
وزیر اعلیٰ پنجاب چودھری پرویزالٰہی نے پی ٹی آئی کے چئیرمین عمران خان کے کنٹینر کے قریب فائرنگ کے واقعہ کا سخت نوٹس لیتے ہوئے انسپکٹر جنرل پولیس سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔ انہوں نے کہا کہ واقعہ کی تحقیقات کرکے رپورٹ پیش کی جائے، فائرنگ میں ملوث ملزمان کو جلد قانون کی گرفت میں لایا جائے، زخمی افراد کو علاج معالجے کی بہترین سہولتیں فراہم کی جائیں، فائرنگ کا واقعہ ناقابل برداشت ہے، اللہ تعالٰی کا شکر ہے کہ عمران خان خیریت سے ہیں۔