news-details

کل کا واقعہ ہمارے لئے شرمندگی کا باعث ہے، عمران خان پر حملے کو سیاسی رنگ دیا جا رہا ہے: خواجہ آصف

اسلام آباد: (جمعہ: 04 نومبر2022ء) وزیردفاع خواجہ آصف کا کہنا ہے کہ عمران خان پر فائرنگ کے واقعے کا رخ سیاست دانوں اور ادارے کے سینئر افسر کا نام لے کر موڑا جا رہا ہے، عمران خان پر حملے کو سیاسی رنگ دیا جا رہا ہے، چاہتے ہیں واردات کرنے والوں کی پشت پناہی کرنیوالے بے نقاب ہوں۔
وزیردفاع خواجہ آصف نے قومی اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ واقعہ کا رخ ایسی جانب موڑا جا رہا ہے جہاں قاتلانہ حملے کا کوئی ملزم نہیں ملے گا، اس ساری چیز کو سبوتاژ کر کے سیاسی مقاصد حاصل کرنے کی کوشش کی گئی، کل کا واقعہ ہمارے لئے شرمندگی کا باعث ہے، ساری دنیا دیکھ رہی ہے کہ اس واقعہ کے بعد پاکستان کا کیا بنے گا۔
انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت چاہتی ہے کہ کل کے واقعے کے پیچھے اگر کوئی سازش ہے تو اسے سامنے لایا جائے، اس مسئلے کو سیاسی رنگ دیا گیا تو اس قسم کے معاملات تاریخ میں دفن ہوچکے ہیں، عمران خان نے بار بار کہا کہ مجھے خون نظر آرہا ہے، آج پنجاب کے ڈاکو کی وزارت اعلیٰ کے نیچے عمران خان کے خلاف یہ واقعہ ہوا، لاشیں گری ہیں۔ اللہ نے عمران خان کو بچایا اللہ انہیں محفوظ رکھے۔
وزیردفاع کا کہنا تھا کہ عمران خان پر فائرنگ کے واقعے پر جے آئی ٹی بنائی جائے، حملے پر سیاست کے بجائے مجرموں کے پیچھے جانا چاہیے، انہوں نے وزیر اعظم، رانا ثنااللہ اور ایک ادارے کے افسر کو ملزم بنا دیا، پرسوں تک کہہ رہے تھے اسٹیبلشمنٹ سے رابطے ہیں، اس واردات کو استعمال کر کے کسی ادارے کو بدنام کرنے کی مذمت کرتا ہوں۔